صفحہ اول آئی پی ایس - نيشنل اکیڈمک کونسل English
نيشنل اکیڈمک کونسل

انسٹی ٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز کو رہنمائی فراہم کرنے والا فورم نیشنل اکیڈمک کونسل ہے۔ اس کونسل کی ذمہ داری ہے کہ وہ نظر رکھے کہ IPS اپنے وژن کی روشنی میں عمومی طور پر اپنا کردار ادا کر رہا ہے۔ اس مقصد کے لیے یہ کونسل سالانہ ریسرچ پروگرام کی منظوری دیتی ہے اور اس پر عمل درآمد کا جائزہ لیتی ہے۔ اس کونسل میں پچیس تا تیس نمایاں اسکالرز اور ماہرین شامل ہیں جو متنوع سماجی، سیاسی اور مذہبی نمائندگی کو یقینی بناتے ہیں۔ کونسل کا سال میں کم ازکم ایک اجلاس ہونا ضروری ہے جس میں جاری پالیسیوں اور پراجیکٹس کا جائزہ اور مستقبل کا علمی منصوبہ زیربحث آتا ہے۔ موجودہ نیشنل اکیڈمک کونسل جنوری ۲۰۱۴ءمیں تشکیل دی گئی جو ۲۰۱۶ءتک کام کرے گی۔

پروفیسرخورشیداحمد

پروفیسرخورشیداحمد ایک معروف اسکالر، ماہر معاشیات اور دینی وعلمی حلقے کے متحرک رہنما ہیں۔ وہ انسٹی ٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز اسلام آباد کے بانی چیئرمین ہیں۔ وہ اردو اور انگریزی میں ۷۰ سے زائد کتب تحریر/تدوین/ ترجمہ کر چکے ہیں۔ ان کی بہت سی کتابوں کا ترجمہ . ...... مزید
پروفیسر خورشید احمد

عدنان سرور خان

ڈاکٹر عدنان سرورخان پشاور یونیورسٹی میں شعبہ بین الاقوامی تعلقات کے چیئرمین ہیں۔ پاکستان کی خارجہ پالیسی، علاقائی اور بین الاقوامی سیاست اور علاقائی سلامتی کے مسائل آپ کی خصوصی دلچسپی کے موضوعات ہیں۔ وہ اپنے لیکچرز اور تحقیقی مقالات کے ذریعے .......مزید

ڈاکٹر عدنان سرور

اکرم ذکی

جناب اکرم ذکی سینیٹ میں خارجہ امور کمیٹی کے چیئرمین رہے ہیں۔ وہ ایک نفیس اور قابل سفارت کار کی حیثیت سے پہچانے جاتے ہیں۔ پاکستان کے سفیر کی حیثیت سے انہوں نے چین، امریکہ، نائیریمیا اور فلپائن میں خدمات انجام دیں اور پاکستان کی سول سروس میں......مزید

اکرم ذکی

امان اللہ خان

جناب امان اللہ خان جہاں دیدہ بزنس مین اور بزنس کے معاملات میں ماہر تجزیہ کار ہیں۔ وہ راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے چیئرمین رہے ہیں، نیز معروف تجارتی گروپوں اور کمپنیوں میں اہم مناصب پر خدمات انجام دیتے رہے ہیں .......مزید

امان اللہ خان

انیس احمد

پروفیسر ڈاکٹر انیس احمد انسٹی ٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز کے وائس چیئرمین ہیں۔ وہ بین الاقوامی شہرت کے حامل سماجی سائنس دان ہیں۔ انہوں نے ٹمپل یونیورسٹی پنسلوانیا، امریکہ سے پی ایچ ڈی کیا۔ انہوں نے قومی اور بین الاقوامی سطح پر علمی قیادت کے کئی مناصب پر کام کیا۔ آج کل وہ رفاہ انٹرنیشنل یونیورسٹی اسلام آباد کے وائس چانسلر کی حیثیت سے اپنی ذمہ داریاں ادا کررہے ہیں۔......مزید

ڈاکٹر انیس احمد

خالد اقبال

ایئر کموڈور(ر) خالد اقبال پاکستان کی ایئر فورس میں اسسٹنٹ چیف آف اسٹاف کی حیثیت سے کام کرتے رہے ہیں۔ ایئر فورس میں ملازمت کے دورانیہ میں انہوں نے دو اسکواڈرن کو کمانڈ کیا .......مزید



فصیح الدین

جناب فصیح الدین منصوبہ بندی کمیشن پاکستان کے چیف اکانومسٹ رہے ہیں۔ وہ وزیرخزانہ کے مشیر اور وزارت خزانہ کے اکنامک ایڈوائزر کے مناصب پر بھی کام کرتے رہے ہیں۔ وہ بہت سی کتابوں، تحقیقی مطالعات اور مضامین کے مصنف ہیں۔ علاوہ ازیں اپنی فنی مہارت .......مزید
فصیح الدین

حسن صہیب مراد

ڈاکٹر حسن صہیب مراد یونیورسٹی آف مینیجمنٹ اینڈ ٹیکنالوجی (UMT) لاہور کے ریکٹراور ایسوسی ایشن آف مینیجمنٹ ڈویلپمنٹ انسٹ ٹیوشنز پاکستان کے چئیر مین ہیں۔ وہ معروف ماہر تعلیم ہیں .......مزید

حسن صہیب مراد

عفت ڈار

محترمہ ڈاکٹر عفت ڈار معروف ماہر نفسیات اور ماہر تعلیم ہیں۔ آپ فیڈرل پبلک سروس کمیشن میں چیف سائیکالوجسٹ کی حیثیت سے ذمہ داریاں ادا کرتی رہی ہیں۔ آپ نے تعلیم کی نفسیاتی اساسیات میں کولمبیا یونیورسٹی نیویارک سے ماسٹر کیا اور مینی سوٹایونیورسٹی امریکہ سے .......مزید

عفت ڈار

مرزا حامد حسن

جناب مرزا حامد حسن اپنی قابلیت کی بناء پر بیوروکریسی میں ایک نمایاں شخصیت رہے ہیں۔ وہ فیڈرل سیکرٹری کی حیثیت سے وزارتِ پانی و بجلی، شماریات ڈویژن اور وزارتِ خزانہ میں خدمات انجام دے چکے ہیں۔ ....... مزید



ایم-ریاض الحق

جناب ایم-ریاض الحق سول سروس سے وابستہ رہے ہیں۔ وہ پاکستان کے سرکاری اور بین الاقوامی مالیاتی اداروں میں ۴۵ سال سے زائد عرصہ کام کرنے کا گراں قدر تجربہ رکھتے ہیں۔ ....... مزید



رستم شاہ مہمند

جناب رستم شاہ مہمند افغانستان اور وسطی ایشیا کے امور کے ماہر اور معروف دفاعی تجزیہ کار ہیں۔ آپ نے افغانستان میں پاکستان کے سفیر کی حیثیت سے خدمات انجام دیں نیز آپ تقریبا دس سال تک پاکستان میں افغان مہاجرین .....مزید

رستم شاہ مہمند

سعدیہ عباسی

محترمہ سعدیہ عباسی بیرسٹر ہیں اور پاکستان سینیٹ کی رکن ہیں۔ قانون کی تعلیم کے لیے دنیابھر میں مشہور امریکی اور برطانوی اداروں سے قانون اور سیاسیات کی تعلیم حاصل کرنے کے بعد آپ ہمہ پہلو سیاسی، معاشی اور سماجی اصلاح کی سرگرمیوں .......مزید

سعدیہ عباسی

شمشاد احمد خان

جناب شمشاد احمد خان پاکستان کے سفیر اور سیکرٹری وزارتِ خارجہ رہ چکے ہیں۔آپ کو سفارت کاری کے مخصوص میدانوں میں کام کا خصوصی تجربہ حاصل ہے، جن میں دوطرفہ اور کثیرالجہت سفارت کاری، علاقائی تعاون، تنازعات کا حل، سدباب کی سفارت کاری اور عوامی امور شامل ہیں۔ ...مزید
شمشاد احمد خان

زاہد الراشدی

جناب مولانا زاہدالراشدی معروف اسکالر اور گوجرانوالہ (پنجاب) کے ایک بڑے دینی مدرسہ کے پرنسپل ہیں۔ انسانی حقوق کے فروغ اور سماجی رویوں کی اصلاح کے موضوعات پر اپنے مؤثر کالموں، لیکچرز اور باہمی مذاکرات کے باعث آپ علمی دنیا میں ایک جانی پہچانی .....مزید

زاھد الراشدی

قبلہ ایاز

ڈاکٹر قبلہ ایاز جامعہ پشاور میں اسلامک اینڈ اورینٹل اسٹڈیز فیکلٹی کے ڈین ہیں۔ اس سے قبل بھی وہ کئی اہم علمی مناصب پر ذمہ داریاں ادا کر چکے ہیں، جن میں شامل ہیں: قائم مقام وائس چانسلر جامعہ پشاور؛ ڈین فیکلٹی، اسلامک اسٹڈیز اور عربی  ..... مزید

قبلہ ایاز

احسان الحق

جنرل (ریٹائرڈ) احسان الحق جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی (JCSC) پاکستان کے سابق چیئرمین ہیں۔ ۲۰۰۷ء میں آرمی سے ریٹائر ہونے کے بعد سے جنرل احسان الحق مختلف کاروباری، علمی اور رفاہی سرگرمیوں میں شریک رہے ..... مزید

احسان الحق

احمر بلال صوفی

جناب احمر بلال صوفی ایک سینئر قانون دان اور پاکستان کے سابق وفاقی وزیر قانون ہیں۔ انہوں نے گورنمنٹ کالج لاہور سے گریجویشن اور کیمبرج یونیورسٹی برطانیہ سے 1988ء میں ایل ایل ایم کیا۔.......مزید

ahmerbilal

منیب الرحمن

مفتی منیب الرحمن رویت ہلال کمیٹی پاکستان کے چیئرمین ہیں اور ملک کے چوٹی کے مذہبی اسکالرز میں ان کا شمار ہوتا ہے۔ انہوں نے کراچی یونیورسٹی سے اسلامک اسٹڈیز میں ماسٹرز کیا اور اسلامی علوم اور فقہ کی تعلیم دارالعلوم امجدیہ سے حاصل کی.......مزید

muftimuneeb

سعید احمد قریشی

جناب سعید احمد قریشی پلاننگ کمیشن پاکستان کے وائس چیئرمین کی حیثیت سے 1994ء میں ریٹائر ہوئے۔ اس سے قبل بھی وہ حکومتِ پاکستان کے کلیدی عہدوں پر کام کر چکے ہیں جن میں سیکرٹری جنرل فنانس اور ریونیو، فیڈرل سیکرٹری برائے فنانس ڈویژن.......مزید

saeemahmed

سارہ صفدر

پروفیسر ڈاکٹر سارہ صفدر خیبرپختونخوا میں پبلک سروس کمیشن آف پاکستان کی رکن ہیں۔ اس سے قبل وہ کئی کلیدی علمی مناصب پر کام کر چکی ہیں جن میں پروفیسر اور ڈین، فیکلٹی آف مینجمنٹ اینڈ سوشل سائنسز، اقراء نیشنل یونیورسٹی، پشاور ..... مزید
sarah safdar

جاوید اقبال

پروفیسر ڈاکٹر جاوید اقبال آج کل بلوچستان یونیورسٹی، کوئٹہ کے وائس چانسلر ہیں۔ اس سے پہلے وہ ہمدرد یونیورسٹی کراچی میں فارمیسی فیکلٹی کے ڈین بھی رہ چکے ہیں۔ وہ لیکچرار، اسسٹنٹ پروفیسر، ایسوسی ایٹ پروفیسر اور پروفیسر کے طور پر فارمیسی، کلینیکل فارمیسی، فارماکالوجی اور مائیکروبیالوجی ..... مزید
javaid iqbal

ظہور احمد سواتی

ڈاکٹر ظہور احمد سواتی زرعی یونیورسٹی پشاور کے وائس چانسلر ہیں۔ اس سے قبل وہ اس یونیورسٹی میں تین دہائیوں تک ڈین، ڈائریکٹر، پروفیسر، ایسوسی ایٹ پروفیسر، اسسٹنٹ پروفیسر اور لیکچرار کے طور پر خدمات دیتے رہے۔ 94-1993ء میں وہ اٹلی کی یونیورسٹی آف توشیا، ویٹربو کے شعبہ ایگروبیالوجی ..... مزید
zahoor sawati

خالدرحمٰن

خالد رحمٰن آئی پی ایس کے بانیوں میں سے ہیں اور ۱۹۸۲ء سے ڈائریکٹر جنرل کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے ہیں۔ معاشیات میں ایم اے ہیں۔ تحقیق، تربیت اور انتظام میں ان کے وسیع تجربے نے آئی پی ایس کو ایک فعال تھنک ٹینک کی حیثیت دینے میں اہم کردار ادا کیا ہے ..... مزید
kr 1

سابق اراکین



ظہور احمد سواتی چھاپیے ای میل

zahoor sawatiڈاکٹر ظہور احمد سواتی زرعی یونیورسٹی پشاور کے وائس چانسلر ہیں۔ اس سے قبل وہ اس یونیورسٹی میں تین دہائیوں تک ڈین، ڈائریکٹر، پروفیسر، ایسوسی ایٹ پروفیسر، اسسٹنٹ پروفیسر اور لیکچرار کے طور پر خدمات دیتے رہے۔ 94-1993ء میں وہ اٹلی کی یونیورسٹی آف توشیا، ویٹربو کے شعبہ ایگروبیالوجی اور ایگروکیمسٹری میں پوسٹ ڈاکٹرل فیلو کی حیثیت سے وابستہ رہے۔

انہوں نے ساؤتھ ڈکوٹا اسٹیٹ یونیورسٹی، بروکنگ، امریکہ سے پلانٹ بریڈنگ اور جینیٹکس میں پی ایچ ڈی کیا۔ انہیں کئی علمی اعزازات اور ایوارڈ ملے جن میں 2013ء میں تمغۂ امتیاز، 2012ء میں ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ ایوارڈ، 2005ء، 2007، 2011ء اور 2012ء میں Productive Scientist ایوارڈ اور 2005ء میں صدارتی ”اعزازِفضیلت“ ایوارڈ شامل ہیں۔ نیز 2004ء میں Distinguished Scientist ہونے کا اعزاز حاصل ہوا۔

وہ بہت عمدہ تعلیمی اور انتظامی تجربہ رکھنے کے باعث کئی قومی اور بین الاقوامی اداروں کے رکن ہیں۔ ان کے شائع شدہ تحقیقی مقالات اور گہرے علمی مطالعہ کی فہرست طویل ہے۔ وہ پی ایچ ڈی، ایم فل اور ایم ایس سی کی سطح کے کئی تحقیقی مقالات کے نگران یا شریک نگران رہے ہیں۔

 
جاوید اقبال چھاپیے ای میل

javaid iqbalپروفیسر ڈاکٹر جاوید اقبال آج کل بلوچستان یونیورسٹی، کوئٹہ کے وائس چانسلر ہیں۔ اس سے پہلے وہ ہمدرد یونیورسٹی کراچی میں فارمیسی فیکلٹی کے ڈین بھی رہ چکے ہیں۔ وہ لیکچرار، اسسٹنٹ پروفیسر، ایسوسی ایٹ پروفیسر اور پروفیسر کے طور پر فارمیسی، کلینیکل فارمیسی، فارماکالوجی اور مائیکروبیالوجی کی تدریس کا 20 سالہ تجربہ رکھتے ہیں۔

تعلیمی اعتبار سے وہ پنجاب یونیورسٹی لاہور سے پی ایچ ڈی اور ایم فارمیسی کی ڈگریاں رکھتے ہیں۔ ان کے بہت سے تحقیقی مقالات شائع ہو چکے ہیں جو ان کے گہرے مطالعے اور تحقیق پر مبنی ہیں۔ اپنے تخصص کے میدان میں وہ ایم فل اور پی ایچ ڈی اسکالرز کے نگران کے طور پر بھی کام کرتے ہیں۔
پروفیسر ڈاکٹر جاوید اقبال مختلف حیثیتوں سے متعدد اداروں اور تنظیموں سے وابستہ رہے ہیں اور ملک بھر میں مختلف مقامات پر بہت سے سیمیناروں اور ورک شاپ پروگراموں میں شریک ہوتے رہے ہیں۔

 
سارہ صفدر چھاپیے ای میل

sarah safdarپروفیسر ڈاکٹر سارہ صفدر خیبرپختونخوا میں پبلک سروس کمیشن آف پاکستان کی رکن ہیں۔ اس سے قبل وہ کئی کلیدی علمی مناصب پر کام کر چکی ہیں جن میں پروفیسر اور ڈین، فیکلٹی آف مینجمنٹ اینڈ سوشل سائنسز، اقراء نیشنل یونیورسٹی، پشاور؛ پروفیسر اور ڈین شعبہ سوشل سائنسز، پشاور یونیورسٹی اور قائم مقام ڈین شعبہ آرٹس اینڈ ہیومینیٹز، پشاور یونیورسٹی کے مناصب شامل ہیں۔

ڈاکٹر سارہ صفدر دنیا بھر کے دیگر اداروں میں بھی تعلیمی رہنمائی کے اہم فرائض ادا کرتی رہی ہیں جیسے رکن سینیٹ، پشاور یونیورسٹی؛ رکن فنانس کمیٹی، پشاور یونیورسٹی؛ رکن کمیٹی برائے ترقی سوشل سائنسز اور ہیومینیٹز پاکستان، ہائر ایجوکیشن کمیشن پاکستان؛ رکن سنڈیکیٹ، خواتین یونیورسٹی، پشاور؛ ریسرچ فیلو شعبہ بشریات (انتھروپالوجی)، درہام یونیورسٹی، برطانیہ؛ بڑھتی عمر کے قومی گروپ کی رکن، وفاقی وزارت برائے ترقی خواتین، سماجی بہبود اور خصوصی تعلیم، اسلام آباد؛ رکن سنڈیکیٹ، زرعی یونیورسٹی، پشاور؛ رکن بورڈ آف اسٹڈیز، سیرت و علوم اسلامی فیکلٹی؛ رکن ساؤتھ ایشین ریسرچ نیٹ ورک (SARN)؛ رکن بورڈ آف گورنرز، ایڈورڈ کالج، پشاور؛ رکن سنڈیکیٹ، مالاکنڈ یونیورسٹی، چکدرہ، دیر؛ رکن نیشنل کمیشن برائے اقلیات، حکومت پاکستان؛ رکن ریسرچ بورڈ آف ایڈوائزرز، امریکن بایوگرافیکل انسٹی ٹیوٹ، نارتھ کیرولینا؛ وزٹنگ پروفیسر برائے ”کمیونٹی ڈویلپمنٹ اِن پاکستان“، شعبہ سوشل ورک ایجوکیشن، ساؤتھ ایشیا پیسفک ریجن نیز وزٹنگ پروفیسر اسکول آف سوشل ورک اور شعبہ بشریات (انتھروپالوجی)، یونیورسٹی آف پنسالوینیا، فلاڈیلفیا، امریکہ۔

تعلیمی اعتبار سے وہ سوشیالوجی میں پی ایچ ڈی اور سوشل ورک میں ماسٹرز کی ڈگری رکھتی ہیں۔ وہ ہائر ایجوکیشن کمیشن کی جانب سے پی ایچ ڈی اور ایم فل کے مقالوں کی نگران کے طور پر مجاز ہیں۔ ان کی نگرانی یا شریک نگرانی میں 5 پی ایچ ڈی، 5 ایم فل اسکالرز اور 350 سے زائد پوسٹ گریجویٹس تیار ہوئے۔
وہ چار کتابوں کی مصنفہ ہیں جن کے عنوانات سوشل ورک کے مختلف پہلوؤں کا احاطہ کرتے ہیں نیز انہوں نے بہت سے مقالات و مضامین بھی تحریر کیے جو زیادہ تر ایسے ہی موضوعات پر ہیں۔
انہیں ملنے والے قومی اور بین الاقوامی ایوارڈز کی طویل فہرست ان کی علمیت، پیشہ ورانہ اعلیٰ مہارت اور کمال کے اعتراف کا اظہار ہیں۔

 
اکبر سعید اعوان چھاپیے ای میل

akbar saeedمیجر جنرل ریٹائرڈ اکبر سعید اعوان ایک اعلیٰ پیشہ وَر دفاعی ماہر اور علمی شخصیت ہیں، انہوں نے کئی بڑے عہدوں پر پاکستان کے متعدد باوقار تیکنیکی اور علمی اداروں میں خدمات انجام دی ہیں۔ یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی لاہور سے گریجویشن کے بعد انہوں نے فوج میں کور آف الیکٹریکل اینڈ مکینیکل انجینئرز میں کمیشن حاصل کیا۔ وہاں انہوں نے کمانڈ اینڈ اسٹاف کالج کوئٹہ سے بیچلر آف سائنس (امتیازی) کی ڈگری حاصل کی اور پھر قائداعظم یونیورسٹی اسلام آباد سے ڈیفنس اینڈ اسٹریٹیجک اسٹڈیز میں ماسٹرز کیا۔

انہوں نے پاکستان کے کئی اعلیٰ تعلیمی اداروں میں قیادت کے اہم عہدوں پر کام کیا۔ جیسے سربراہ کالج آف الیکٹریکل انجینئرنگ، نیشنل یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی (NUST) اسلام آباد؛ پرنسپل واہ انجینئرنگ کالج، یونیورسٹی آف واہ؛ چیف انسٹرکٹر کالج آف الیکٹریکل اینڈ مکینیکل انجینئرنگ، نیشنل یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی (NUST) راولپنڈی؛ ڈائریکٹر جنرل انسٹی ٹیوٹ آف مینجمنٹ اور پاکستان رورل ڈویلپمنٹ اکیڈمی پشاور۔

ان کی قومی سطح کی دیگر قابل ذکر ذمہ داریوں میں شامل ہیں: ڈائریکٹر جنرل کور آف مکینیکل انجینئرنگ، جی ایچ کیو؛ ڈائریکٹر جنرل انسپیکشن آف ٹیکنیکل ڈویلپمنٹ (ITD)، جی ایچ کیو؛ چیف سائنٹسٹ اور ٹیکنیکل ایڈوائزر، وزارت دفاع؛ کمانڈنٹ، 502 سنٹرل ورک شاپ، راولپنڈی اور چیف آف بائیو میڈیکل انجینئر، آرمڈ فورسز انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی (AFIC)۔ انہوں نے ملک کے اندر اور ملک سے باہر بھی مختلف حیثیتوں میں کئی اہم ذمہ داریاں ادا کیں۔ ان کی دلچسپی کے خاص میدانوں میں انجینئرنگ ایجوکیشن مینجمنٹ، دفاعی ٹیکنالوجی میں ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ، اندرونی اور بیرونی حوالے سے قومی سلامتی اور قومی ترقی کے مختلف امور شامل ہیں۔

 
سعید احمد قریشی چھاپیے ای میل

saeemahmedجناب سعید احمد قریشی پلاننگ کمیشن پاکستان کے وائس چیئرمین کی حیثیت سے 1994ء میں ریٹائر ہوئے۔ اس سے قبل بھی وہ حکومتِ پاکستان کے کلیدی عہدوں پر کام کر چکے ہیں جن میں سیکرٹری جنرل فنانس اور ریونیو، فیڈرل سیکرٹری برائے فنانس ڈویژن، وزارتِ تجارت، اقتصادی امور ڈویژن، وزارتِ تعلیم، وزارتِ خوراک و زراعت، مینیجنگ ڈائریکٹر ٹورزم ڈویلپمنٹ کارپوریشن، چیف سیکرٹری حکومتِ سندھ اور جائنٹ سیکرٹری وزارتِ تجارت حکومتِ پاکستان شامل ہیں۔

ریٹائرمنٹ کے بعد بھی آپ مختلف قومی اور بین الاقوامی ذمہ داریوں کی ادائیگی کے سلسلہ میں معروف اداروں اور تنظیموں، جیسے ورلڈ بنک، یو این ڈی پی، یو این ایف پی اور ایشین ڈویلپمنٹ بنک سے مسلسل وابستہ رہے۔ آپ نے سات کتابیں بھی تحریر کی ہیں جن کے موضوعات میں ترقیاتی منصوبہ بندی، زرعی نشوونما، تعلیمی ترقی، نجکاری اور معاشی پالیسی وغیرہ شامل ہیں۔

 
«شروعپیچھے123456789آگےآخر»

صفحہ: 1